Home » سوزاک

سوزاک

مردانہ سوزاک

: Gonorrhoea
تعریف:
سوزاک ایک متعدی بیماری ہے اور اس کا ہدف بھی اعضائے تناسل بنتے ہیں مگر قحبہ گری اور جنسی بے راہ روی کے ہاتھوں اور برے اعمال کے مرتکبین اس کے انجام سے بے خبر ہوتے ہیں جس کی وجہ سے انہیں طرح طرح کی ہلاکت انگیزیوں کا سامنا کرنا پڑتاہے سوزاک بھی انہی بیماریوں میں سے ایک بیماری ہے ۔سوزاک ایک متعدی بیماری ہے پیشاب کی نالی جو نائیزہ Uterhra کہلاتی ہے اس میں شدید ورم ہو جاتا ہے اور اس میں سے پیپ بہنے لگتی ہے ابتدا ء اس کی اس طرح ہوتی ہے کہ قضیب کے بالائی سرے پر درد ہونے لگتا ہے رفتہ رفتہ یہ درد بڑھنے لگتاہے پیشاب کے ساتھ جلن ہوتی ہے قضیب سرخ ہو جاتاہے کپڑا لگنے سے شدیددرد ہوتاہے بعد ازاں اس میں پیپ ملا خون آنے لگتاہے ساتھ ہی مریض کو بخار ہونے لگتا ہے یہ بیماری ناپاک مباشرت کی چھوت لگنے سے چوبیس گھنٹے سے لے کر پانچ چھ یوم کے اندر ظاہر ہوتی ہے بعض اوقات اس میں اس سے بھی زیادہ وقت لگتا ہے ۔ابتدا میں اعضا ئے تناسل کے سرے مین ایک خاص قسم کی خراش سے پیپ مقدار میں تھوڑ ی اور لیس دار نکلتی ہے اور نائیزہ کے منہ میں چمٹ جاتی ہے اور کپڑے میں لگنے سے داغ پیدا ہوتا ہے پیشاب کی نالی مین سرخی کے باعث اور رات کے وقت بکثرت انتشار کے باعث ایسا غضب ناک درد ہوتا ہے کہ بیمار کی چینخیں نکل جاتی ہیں اور اس کی نیند حرام ہو جاتی ہے۔ایک ہفتے کے بعد پیپ بہت زیادہ آنے لگتی ہے اور گاڑھی سفید زردی مائل ہو تی ہے بعض اوقات اس کے ساتھ خون ملا ہوتاہے اور پیشاب کرتے وقت نیز بوقت انتشار بہت ہی غضب کا درد ہوتا ہے بوجہ سوزش پیشاب کی نالی تنگ ہو جاتی ہے اور پیشاب چیر کر آتا ہے اور ساتھ بخار بھی آتاہے ایک ہفتے کے بع جب سوزش کم ہو جاتی ہے اور اس کیساتھ ہی دیگر علامات کی کمی بھی ہونی شروع ہو جاتی ہے پھر پیشاب کرتے وقت اور بوقت انتشار درد کم ہو جاتا ہے اور بعض اوقات درد بالکل ہی معدوم ہو جاتاہے لیکن پیپ آتی رہتی ہے اور یہ سفید لیس دار اور چچپپی ہوتی ہے ۔
اسباب:
اکثر اس مرض کے پھیلاؤ میں ان بازاری عورتوں کا ہاتھ ہوتا ہے جو بذات خود اس مرض میں مبتلا ہوتی ہیں یا جن کی اندم نہانی میں سوزا کی مادہ ہو ایسی عورتوں سے مجامعت کرنے سے یہ بیماری مردوں میں پھیلتی ہے اور پھر جب یہ مرد اپنی بیوی کے ساتھ مباشر ت کرتے ہیں تو ان کو بھی یہ مرض لاحق ہو جاتا ہے جس سے ان عورتوں کی زندگی بھی تلخ ہو کر رہ جاتی ہے ۔اس کے علاوہ حیض کے دوران لیکوریا میں مبتلا عورتوں یا اندم نہانی کی صفائی نہ کرنے والیوں ، لبہائے رحم پرپوشیدہ زخم رکھنے والی عورتوں سے بھی گاہے بگاہے کثرت مجامعت کرنے کے باعث نا ئیزہ میں ورم ہو جاتاہے اور اس سے پیپ آنے لگتی ہے یہ سادہ ورم نائیزہ ہوتا ہے جو سوزاک کی ابتدائی حالت ہے ۔سوزاک فاسد مادہ ہوتا ہے جس کی وجو ہات میں کثرت سے شراب نوشی ، بیرونی ضربات، خراش یا پھر پتھری وغیرہ ہے۔

1356962556_gonorrhea-symptoms

1356962588_images (5)

تشخیص علاج :
اس کی تشخیص اور علاج کے دوران کو بتلانا بے حد مشکل ہوتا ہے کیونکہ اس مرض کے متعلق حتمی طور پر کچھ نہیں کہا جا سکتا یہ مرض کیا رک اختیار کرے گا اور اس کے نتائج کیا برآمد ہونگے کیونکہ اس کے حقیقی اسباب پوشیدہ ہوتے ہیں کوئی مریض مکمل علاج معالجے کے بعد بھی درس نہیں ہو پاتا اور کوئی چند یوم میں ہی درست ہو جاتاہے بعض اوقات اس میں ایسی پیچیدگیاں پیدا ہوتی ہیں کہ مہینوں اس سے دوچارر ہنا پڑتا ہے ۔عموماً یہ دیکھا گیا ہے کہ خنازیری مزاج والے ، زود رنج و عصبی طبعیت والے اشخاص اس مرض میں زیادہ تکلیف پاتے ہیں یہ مرض مختلف طبیعتوں کے عصبی میلان پر منحصرہے ۔
خصوصی ہدایات:
کبھی بھی بازاری عورتوں سے تعقلق نہ رکھا جائے کیونکہ یہ مرض نسل در نسل چلتا اور کبھی بھی اس نسل سے ختم ہونے کا نام نہیں لیتا۔
علاج :
اسکے علاج میں خصوصی توجہ خاص اہمیت کی حامل ہے تاکہ مرض کا قلع قمع بھی ہو سکے اور مریض کئی قسم کی پیچدگیوں سے بھی بچ سکے اکثر علاج معالجہ میں اس مرض کو دبا دیا جاتا ہے جس کی وجہ سے یہ بعد میں ابھر کر ہمیشہ کے لئے روگ سہنے کا باعث بنتا ہے اور بیمار کی ساری زندگی تلخ ہو کر رہ جاتی ہے۔ اس لئے کسی انتہائی ماہر مستند طبیب سے اس کا علاج کر وایا جائے تاکہ مرض پیچیدگی اختیار نہ کر سکے۔
٭عورتوں کا سوزاک:
تعریف:
مردوں کی مانند عورتوں میں بھی سوزاک ہوتا ہے اس میں فری سیکس کی حامی عورتیں اور بیوائیں مبتلا ہوتی ہیں بازاری عورتیں اس کا زیادہ شکار ہوتی ہیں اس اس کی وجہ سے گھریلو عورتوں تک ان کے خاوند اس مرض کو منتقل کرتے ہیں مگر گھریلوعورتیں شرم کے باعث اس کے علاج سے الغرضی اختیار کر کے اپنے لئے نقصان کا باعث بنتی ہیں اور اس طرح وہ رحم اورپیٹرو کی شدید تکالیف کا سامنا کرتی ہیں ۔عورتوں میں اس کا حملہ مردوں کی نسبت کم تر اور پیچیدگیوں کے لحاظ سے بھی کرم تر ہوتا ہے بعض اوقات اس کاحملہ اس قدر نر م ہوتا ہے کہ انہیں اس بیماری کے ہونے کا پتہ بھی نہیں چلتا ۔ بعض اوقات اندام نہانی اور پیشاب کی نالی کے سوراخ میں سوزش ظاہر ہوتی ہے اور پیشاب کرتے وقت سخت تکلیف ہوتی ہے اور پیشاب کی حاجت بار بار ہوتی ہے نہایت شدید حالتوں میں پیشاب کے ساتھ خون بھی آتا ہے۔
٭سائنسی تجزیہ :

عورتوں میں سوزاک زیادہ خطرناک ہوتا ہے

عورتوں میں سوزاک کے اثرات آئندہ نسل پر زیادہ پڑتے ہیں ایسی صورت میں بچے کی ولادت ہو تو اس کی آنکھوں میں انفیکشن پیدا ہونے کا خطرہ لاحق ہو سکتا ہے اسی طرح لڑکیوں کی پیدائش میں ان کے اعضائے مخصوصہ میں انفیکشن یا سوزاک ہو سکتاہے ۔بعض اوقات یہ محسوس ہوتا ہے کہ عورت اس بیماری سے صحت یاب ہو گئی ہے مگر در حقیقت اس کے جسم میں یہ بیماری موجود رہتی ہے جس کے نتیجے میں رحم کا منہ متاثر ہو کر قازف نالیوں میں سوزاک کا باعث بنتا ہے کیونکہ قاذف نالیاں اس بیماری کے جرا ثیم کی پرورش گاہ ہوتی ہیں اور اسی طرح با وصف علاج کے مردانہ منویہ کے کرم بیضہ انثیٰ تک نہیں پونچ پاتے چونکہ قاذف نالیاں ہی پہلے پہل بیضہ کی زرخیزی یا بارآور کا ذریعہ ہیں اس لئے یہ عملاً عمل بار آور دگی کو روک کر حمل اور بچے کی افزائش میں شدید رکاوٹ کا باعث بنتی ہی

سوزاک-ایک-متعدی-بیماری-ہے

Leave a Reply